Skip to product information
1 of 1

Fiction House

مادام بوواری

مادام بوواری

Regular price Rs.600.00 PKR
Regular price Sale price Rs.600.00 PKR
Sale Sold out
مادام بوواری
گستاؤ فلوبیئر
( چند فقرے)
رودلف کے سامنے مستقبل کی ایک کبھی نہ ختم ہونے والی سڑک بنی ہوئی تھی جس پر محبت کے دن چلتے جا رہے تھے۔
ایما کی زندگی میں پہلی بار ایسا ہوا تھا کہ کسی نے ایسے الفاظ اسے مخاطب کر کے کہے ہوں اور یہ تابناک فقرے سن کر اس کے غرور کو ایسی تسکین ملی اور وہ اس طرح ہلکے ہلکے پھیلتا چلا گیا جیسے کوئی نہانے کے بعد گرم گرم گدوں پر آرام کر رہا ہو۔
زمین پسے ہوئے تماکو کے رنگ کی سی تھی اور ان کے پیروں کی چاپ نہیں سنائی دے رہی تھی، نیچے پڑے ہوئے پھلوں کو گھوڑے اپنی ٹاپوں سے ٹھکراتے چل رہے تھے۔
ایما سر جھکائے سنتی رہی اور پیر کی نوک سے زمین پر پڑے ہوئے لکڑی کے ٹکڑوں کو ادھر سے ادھر کرتی رہی۔۔۔
رات کا اندھیرا جھکتا چلا آ رہا تھا، سورج بالکل زمین سے آ لگا تھا اور اس کی کرنیں شاخوں میں سے آ آ کے آنکھوں کو چندھا رہی تھیں ـ ایما کی گرد جگہ جگہ پتیوں میں یا زمین پر روشنی کے دھبے تھرتھرا رہے تھے جیسے چڑیاں چاروں طرف اڑتے ہوئے اپنے پر بکھیر گئی ہوں ـ ہر طرف خاموشی چھائی ہوئی تھی، درختوں میں سے ایک مٹھاس سی نکلتی ہوئی معلوم ہو رہی تھی۔
ایما اس موٹے سے کاغذ کو کئی منٹ تک ہاتھ میں لیے رہی ـ ہجے کی بے شمار غلطیاں تھیں ـ ایما ان مشفقانہ باتوں کو سمجھ سمجھ کے پڑھتی رہی جو سارے خط میں اسی طرح کڑ کڑا رہی تھیں جیسے کانٹوں دار جھاڑی میں آدھی چھپی ہوئی مرغیاں۔۔۔
ایپولیت احمکوں کی طرح گول گول آنکھیں پرانے لگا، اور کچھ غور کرنے لگا۔
موسیقی کی تانیں اسے لوری دینے لگیں اور وہ بھی ان میں بالکل جذب ہو کے رہ گئی، اسے اپنا سارا وجود تھرتھراتا ہوا معلوم ہونے لگا، جیسے وائلن کی کمان خود اس کے اعصاب پر چل رہی ہو۔
اس کے علاوہ الفاظ تو ایک ایسی مشین ہیں جن میں سے گذر کر جذبہ بڑا پتلا رہ جاتا ہے۔
صفحات | 371

Shipping & Returns

View full details
  • Free Shipping

    Pair text with an image to focus on your chosen product, collection, or blog post. Add details on availability, style, or even provide a review.